جبرائیل اور آئینہ

حضرت انس نے روایت کیا ہے کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا ہے میرے پاس جبرائیل آئے ہاتھ میں آئینہ لیے ہوئے تھے اور کہنے لگے کہ یہ جمعہ ہے اس کو آپ کے لئے اللہ نے فرمایا ہے کہ یہ عید آپ کے لئے اور آپ کے بعد آنے والوں کے لئے بھی۔ میں نے دریافت کیا کہ اس کے اندر یمن و برکت کیسی ہے تو جبریل نے کہا کہ اس میں ایک عمدہ گھڑی ہے جو آدمی اس ساعت میں بھلائی کی دعا مانگیں۔

اور وہ چیز اگر اس کے مقدر میں ہوتی ہے تو اللہ اسے وہ عطا کر دیتا ہے اگر نہ ہو تو اس کے واسطے اس سے بہتر چیز اس کی خاطر ذخیرہ کی جاتی ہے اس گھڑی میں اگر کوئی آدمی کسی مصیبت سے پناہ طلب کرے تو اس کے مقدر میں ہوچکی ہو تو اللہ اس مصیبت سے بھی عظیم تر مصیبت کو اس پر سے ٹال دیتا ہے اور ہمارے نزدیک وہ تمام ایام کا سردار ہے اور ہم آخرت میں ایک دن مزید طلب کرتے ہیں میں نے پوچھا وہ کیوں تو جبریل نے کہا آپ کے پروردگار نے جنت کے اندر ایک وادی تیار کر رکھی ہے جو سفید ہے اور وہ بھری ہوئی ہے مشک کی خوشبو کے ساتھ۔ جمعہ کے روز علیین سے کرسی پر نزول اجلال فرماتا ہے حتی کہ تمام اس کے دیدار کا شرف حاصل کر لیتے ہیں۔

رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا ہے عمدہ ترین یوم جس میں طلوع آفتاب ہوتا ہے وہ یوم جمعہ ہے اس یوم آدم علیہ السلام پیدا فرمائے گئے اسی روز وہ جنت میں گئے اسی روز وہ جنت سے زمین پر اتارے گئے اسی دن کو ان کی توبہ قبول ہوئی اسی روز انہوں نے وصال پایا۔ اسی روز قیامت قائم ہو گی اور وہ یوم مزید ہے عند اللہ آسمان کے فرشتوں میں اس روز کا نام یہی ہے یعنی جمعہ اور جنت میں لقاء الہی حاصل ہونے کا دن بھی یہی ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: