بندہ مومن کا بھی عجیب معاملہ ہے! زبیر منصوری

بندہ مومن کا بھی عجیب معاملہ ہے! اس کا کچھ بھی تودنیاکےلئے نہیں ہوتا! کچھ بھی نہیں! وہ پیدا ہوتا ہے تو پہلی آواز جو اسے سنوائی جاتی ہے وہ اس کے پیدا کرنے والے کا نام ہوتا ہے ۔ یہاں سے اللہ کے ساتھ جو اُس کا محبت بھرا تعارف ہوتا ہے تو وہ پھر موت اور اس کے بعد تک کی زندگی کے ساتھ ہمیشہ کے لئے جڑ جاتا ہے ۔


آپ زندگی بھر کے دوران پڑھی جانے والی دعائیں دیکھ لین سب اسے لوٹ پلٹ کر اللہ سے جوڑ رہی ہوتی ہین اللہ کو اس کا آخری ٹھکانہ بتا رہی ہوتی ہین
دین اُسے دنیا کو دل میں داخل نہ ہونے دینے کا سبق دیتا ہے کیون؟ کیونکہ وہ اللہ کا گھر ہے جو کائنات کی سب سے بڑی سچائی ہےاور دنیا کائنات کا سب سے بڑا فریب اب بھلا یہ دونون کیسے ایک دل میں جمع ہوں ؟
اللہ چاہتا ہے اس کا پیارا بندہ مومن بس اسی کے خیالوں میں رہے اُسی کو سوچے اُسی کو پائے مشکل ہو تو معصوم بچے کی طرح اُسی سے چمٹ جائے خوشی پائے تو اُسی کی مالا جپے ہر وقت بس اسی کا ہو کر رہے اُسی کی جنت اس کی منزل ہو اسی کا جہنم اسے ڈرا دے وہ پوری زندگی بس یوں گزار دے گویا اس کے پرکار کی نوک
the compass used for drawing circles
اللہ پر رکھی ہوئی ہے اور اس کی پوری زندگی بس اُسی کے گرد گھوم رہی ہے اس سے ایک سینٹی میٹر بھی باہر نہیں جا رہی۔۔۔
پھر یہی وہ بندہ مومن ہوتا ہے جس پر اللہ اپنے مقرب فرشتوں میں فخر کرتا ہے کہ دیکھو یہ ہوتا ہے فرمانبردار! جو تمہاری طرح نہیں ہے بلکہ نافرمانی کا اختیار قوت راستے امکانات سب رکھتا ہے مگر اردگرد پھیلے ،دل لبھانے والے سارے کھلونے اسے مجھ سے غافل نہیں کرتے یہ جان بوجھ کر لوٹ پلٹ کر گھوم پھر کر بس میری ہی طرف آتے ہیں اور پھر فرشتے ان پر رشک کرتے ہیں اللہ کے حکم پر ان کے ہاتھ پاون بن جاتے ہیں انہیں بچاتے ہیں ان کو آگے بڑھاتے ہیں ان کے سینے سکون سے بھر دیتے ہیں ۔۔۔
رمضان ، قران دونوں دراصل ہماری پرکار کی نوک
اللہ پر رکھوانے کی کوشش کرتے ہیں آئیے اس بار ہم بھی اس کی شعوری کوشش کریں دن بھر میں اللہ کو اپنے آس پاس محسوس کریں ،اس کے چھوٹے چھوٹے احسانات اور مہربانیوں کو تلاش کریں شمار کریں شکر کریں شکر کا اظہار کریں بار بار کریں ۔۔۔
وہ بدلے مین ہمیں اور ہماری زندگی کو سکون ،سکھ سے بھر دے گا
ان شا اللہ

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: