اگر کوئی اللہ کے ذکر سے غفلت کرے تو شیطان کیسے طاری ہوتاہے

حضرت انس سے مروی ہے کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کا ارشاد ہے کہ ابن آدم کے دل پر شیطان اپنی سونڈ لگائ ہوتی ہے اللہ کا ذکر کرنے لگتا ہے تو یہ ادھر کھسک جاتا ہے اور اگر اللہ سے غفلت کرے تو اس کے دل کو لقمہ کر لیتا ہے۔

ایک حدیث بیان کرتے ہوئے ابن وضاح کہتے ہیں کہ آدمی چالیس برس کی عمر کا ہو جاتا ہے اور پھر بھی توبہ نہیں کرتا تو اس کے چہرے پر شیطان اپنا ہاتھ پھیرنے لگتا ہے اور کہتا ہے یہ ایسا چہرہ ہے جو نجات حاصل نہیں کرتا اور جیسے کہ انسانی خون اور گوشت کے اندر شہوتوں کی ملاوٹ ہوئی ہوئی ہے۔ ایسے ہی شیطان کے اثرات بھی انسان کے خون اور گوشت میں جاری رہتے ہیں اور ہر سمت سے اس کے دلت پر چھائے رہتے ہیں اسی لیے رسول اللہ نے ارشاد فرمایا ابن آدم کے اندر شیطان یوں جاری ہوتا ہے جس طرح خون رواں ہوتا ہے لہذا تم فاقہ کر کے اس کے چلنے کے راستوں کو مسدود کر دو آپ نے فاقہ کرنا بتایا ہے کیونکہ اس کے باعث شہوت فرو ہوتی ہے۔ اور شیطان کی راہیں بھی شہوات ہیں۔ علاوہ ازیں یہ کہ ہر چہار جانب سے شہوت دل کے اوپر چھائی ہوتی ہیں لہذا ان کا سدباب کرنا آدمی کے لیے ضروری ہے ابلیس کے حالات اللہ نے بیان فرمائے ہیں اللہ کا ارشاد ہے۔

( تیری جانب سیدھی راہ میں ان کے واسطے ضرور بیٹھوں گا پھر میں ان پر ضرور آؤں گا ان کے آگے سے ان کے پیچھے سے ان کے دائیں جانب سے ان کی بائیں سے)۔ جناب رسالت مآب صلی اللہ علیہ وسلم کا ارشاد ہے شیطان ابن آدم کے راستوں پر بیٹھ گیا اس اسلام کی راہ میں وہ بیٹھ گیا اور کہنے لگا کیا تو اسلام اختیار کرتا ہے اور اپنے آباء و اجداد کے دین کو ترک کرتا ہے انسان نے اس کی بات کو نہ مانا اور اس نے اسلام قبول کر لیا۔ پھر یہ شیطان اس کی ہجرت کے راستے میں براجمان ہو گیا اور کہنے لگا کیا تو ہجرت کرنے لگا ہے کیا تو اپنی زمین اور آسمان چھوڑتا ہے اس نے پھر بھی اس کی نافرمانی کی اور ہجرت کر لی۔ پھر وہ جہاد کے راستے پر بیٹھ گیا اور اس کو کہنے لگا تو جہاد کرتا ہے حالانکہ یہ اپنی جان اور مال کو تباہ کرنا ہے تو لڑے گا اور پھر تو قتل کر دیا جائے گا۔ تیری ازواج دیگر لوگوں سے نکاح کریں گی تیرا چھوڑا ہوا مال بھی بانٹ لیا جائے گا اس نے اس کا نافرمان ہوتے ہوئے جہاد کیا۔ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا کہ جس نے یہ کچھ کر لیا اور پھر فوت ہو گیا تو اس کے اوپر اللہ کا یہ حق ہے کہ اس کو جنت میں داخل فرما دے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: