اپنی تنہائیوں کو کیسے پاک رکھیں

نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا : میں اپنی امت میں سے ایسے لوگوں کو جانتا ہوں جو قیامت کے دن تہامہ کے پہاڑوں کے برابر نیکیاں لے کر آئیں گے، اللہ تعالیٰ ان کو فضا میں اڑتے ہوئے ذرے کی طرح بنا دے گا ، ثوبان رضی اللہ عنہ نے عرض کیا: اللہ کے رسول! ان لوگوں کا حال ہم سے بیان فرمائیے۔

اور کھول کر بیان فرمایئے تاکہ لاعلمی اور جہالت کی وجہ سے ہم ان میں سے نہ ہو جائیں، آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: جان لو کہ وہ تمہارے بھائیوں میں سے ہی ہیں، اور تمہاری قوم میں سے ہیں، وہ بھی راتوں کو اسی طرح عبادت کریں گے، جیسے تم عبادت کرتے ہو، لیکن وہ ایسے لوگ ہیں کہ جب تنہائی میں ہوں گے تو حرام کاموں کا ارتکاب کریں گے ۔ تنہائی کے گناہوں سے بچیں اپنی تنہائیوں کو پاک رکھیں کوئی دیکھے نہ دیکھے اللہ تو دیکھتا ہی ہے اور سب سے زیادہ حیا کا حقدار اللہ ہے لوگوں سے نہیں اللہ سے ڈریں اور اپنی تنہائیوں کو پاک رکھیں اللہ کے بعض نیک اور برگزیدہ بندوں کو بھی بعض مرتبہ اپنی زندگی کا کچھ حصہ تنہائیوں میں گزارنا پڑا جسے انہوں نے اپنے خالق ومعبود سے مزید قریب ہونے کا موقع سمجھا اور وہاں سے نکل کر دنیا میں خدائے واحد کی بندگی پر مبنی معاشرے کی تشکیل کے لیے منصوبہ بندی کرتے رہے

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: