لڑکیوں سے دوستی

ایک لڑکے کا میسج آیا کہتا بھائی آپ لڑکیوں سے دوستی کہ خلاف کیوں ہیں اپکی پوسٹ کی وجہ سے میری ایک بہت پیاری دوست مجھے چھوڑ کر چلی گئی بھائی ہاتھ ہولا رکھا کرو تھوڑا مثبت بھی سوچ لیا کرو آپ تو کوئی گنجائش ہی نہیں چھوڑتے ہو؟میں نے کافی دیر سوچا کہ اس کو جواب دوں یا نا دوں یا پھر کیا جواب دوں؟

اچانک سے میں نے اس سے پوچھا بھائی آپ کی کوئی بہن ہے کہتا جی الحمداللہ میری تین بہنیں ہیں، میں کہا اگر برا نا مناؤ تو ایک بات پوچھوں؟اس نے کہا پوچھو؟میں نے میں نے ڈرتے ڈرتے کہا بھائی کیا آپ اپنی تینوں بہنوں میں سے کسی ایک ساتھ میری دوستی کروا سکتے ہو،بس اتنا کہنے کی دیر تھی کہ بھائی صاحب تو ایسے آگ بگولہ ہو گیا کہ پوچھو مت اس نے ایسی کوئی گالی نہیں تھی جو مجھے نا دی ہو،
خیر میں جانتا تھا کہ ری ایکشن ایسا ہی ہوگا کیونکہ میرے معاشرے کہ مرد کی غیرت صرف اپنی بہن بیٹیوں کیلئے ہی جاگتی ہے دوسرے کی بہن بیٹیاں تو میرے مرد کیلئے باپ کا مال ہیں استعمال کی چیزیں ہیں اپنی بہن بیٹی کی بات آے ہمیں سارا دین سمجھ آتا ہے جب کہ دوسرے کی بہن بیٹی کیلئے ہم شیطان بن جاتے ہیں،میں عورت مرد کی دوستی کے خلاف ہوں کیونکہ عورت مرد میں یا دشمنی ہو سکتی ہے یا محبّت ہو سکتی ہےو۔

لیکن دوستی کسی صورت ممکن نہیں ہے کیونکہ ایک تو یہ فطرت کے خلاف ہے دوسرا یہ ہمارے دین کے بھی خلاف ہے دوستی ہمیشہ ہم جنسوں میں ہوتی ہے جو مخالف جنس سے دوستی کا دعوه کرتا ہے وہ سب سے بڑا جھوٹا ہوتا ہے عورت مرد کی دوستی کا دفاع جو بھی کرتا ہے اسکا مقصد صرف مخالف جنس سے چسکے لینا ہوتا ہے اور چسکا جائز ناجائز میں فرق نہیں کرتا،ہوس کے پجاری اپنے چسکے کیلئے مخالف جنس کو آج بہن بنا کر اپنی جنسی تسکین کو پورا کرنے سے بھی بعض نہیں آتے،آخر میں اتنا ہی کہوں گا خاص طور پر اپنے مرد حضرات کو کہ بھائیوں جو رشتہ اپنی بہن کیلئے پسند نہیں کرتے وہ رشتہ دوسروں کی بہنوں کہ ساتھ بھی رکھنا پسند نا کرو غیرت مند وہ نہیں جو صرف اپنے گھر کی عزت کا محافظ ہو بلکہ غیرت مند تو وہ ہے جو ہر گھر کی عزت کا محافظ ہو۔۔۔!آپ سب کی دعاؤں کا طلبگار ہوں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: