حکیم لقمان نصیحت

منیۃ المفتی میں درج ہیں کہ حضرت لقمان حکیم نے اپنے بیٹے سے فرمایا کہ کھانے اور سونے میں کمی کرو اس لیے کہ جو زیادہ کھاتا ہے اور جو زیادہ سوتا ہے روز محشر نیک اعمال سے اس کا ہاتھ خالی ہوگا

حدیث نبوی صلی اللہ علیہ وسلم ہے : ر نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا کہ زیادہ کھانے پینے سے اپنے دلوں کو ہلاک نہ کرو کیونکہ کھانے پینے کی زیادتی سے دل مردہ ہوجاتا ہے۔ جس طرح سے زیادہ پانی سے کھیتی برباد ہو جاتی ہے ہے۔

صالحین کا کہنا ہے کہ معاہدہ ایک ایسی ہنڈیا کی مانند ہے جو ابلتی رہتی ہے ۔ دل پر اس کے بخارات مسلسل پہنتے رہتے ہیں پھر جب ان بخارات کی کثرت ہوجاتی ہے تو دل میلہ گندہ ہو جاتا ہے کثرت سے کھانا کھانے سے علم و فکر میں کمی کا باعث ہے اور پیٹ بھر کر کھانا ذہانت اور سمجھدار دی کو ختم کر دیتا ہے

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: