خوش رہنے کے کچھ اصول

خوش رہنے کے اصول یہ ہیں کہ کبھی نفرت نہ کرو۔ سادہ زندگی گزار و۔ پریشان نہ ہو کم توقعات رکھو اچھا دوست رکھو ہمیشہ مسکراتے رہو۔ سمندر سب کے لیے ایک جیسا ہی ہوتا ہے لیکن کچھ لوگ اس میں سے موتی تلاش کرلیتے ہیں، کچھ مچھلیاں پکڑ لیتے ہیں اور کچھ کو سمندر سے کھارے پانی کے سوا کچھ بھی نہیں ملتا ۔ بادل سے برسنے والا پانی ایک جیسا ہی ہوتا ہے۔ زرخیز زمین اس پانی سے سبزہ اگا لیتی ہے۔

بات جب گھر سے نکل جائے تو پھیلتے ہوئ دیر نہیں لگتی۔ جھگڑا مول لینے سے غم کھانا، زیادہ بہتر ہے۔ بھوک کی آگ تمام جذباتوں کو جلا کر رکھ کر دیتی ہیں۔ خرچ کرنے سے اگر ہاتھ نہ روکا جائے یا ذریعہ آمدنی نہ ہو تو خرچ کرنےسے قارون کا خزانہ بھی ختم ہوجاتا ہے۔ آمدن کے مطابق روپیہ خرچ کرو ایسا کرنے سے کبھی محتاج نہ ہوگے۔ جو تو نہیں جانتا۔۔؟ وہ کسی سے پوچھ لے کیونکہ یہ تیرے لیے بہت بہتر ہے ورنہ ذلیل و خوار ہوگا۔

لوگ مال سے محبت کرتے ہیں ، جس کسی کے پاس ہوگا سب کی عزت کریں گے جب اس کے ہاتھ سے چلاجائے گا تو کوئی اس کا سلام بھی قبول نہ کرے گا۔ چالا ک اور ہوشیار شخص کو وہیں سے نقصان پہنچا ہے جہاں سے وہ بے فکر ہوتا ہے۔ اگر دوسروں کو کسی کام سے روکنا چاہتا ہے تو اس کی ابتداء اپنے آپ سے کر۔ دنیا میں سب سے مشکل کا م اپنی اصلاح کرنا اور ، آسان کام دوسروں پر تنقید ہے۔ دوست کو دولت کی نگاہ سے مت دیکھو وفا کرنےوالے دوست اکثر غریب ہوتے ہیں۔

دو طرح سے چیزیں دیکھنے میں چھوٹی نظر آتی ہیں ۔ ایک دور سے دوسرا غرور ہے۔ انسا ن کی زبان سے اس کی عیب اور خوبیوں کا پتہ چلتا ہے۔ بعض لوگوں کے مرجانے سے بہت سے لوگ مرجاتے ہیں اور بعض لوگوں کے مرجانے سے بہت سے لوگ جینے لگتے ہیں یہ اپنے اپنے کردار کا نتیجہ ہے۔ بیوی اپنے شوہر سے اس وقت تک لڑتی یا ضد کرتی ہے جب تک اس سے پیار کی امید ہوتی ہے۔ جب وہ امید ختم ہوجاتی ہے تو وہ لڑنا اور ضد کرنا بند کردیتی ہے۔

اگر خوش رہنا ہے تو دوسروں کو خوش دیکھ کر حسد نہ کیا کر، دعا دیا کر۔ انسان کا بہترین ساتھ اس کی صحت ہے اگر اس کا ساتھ چھوٹ جائے تو وہ ہر رشتے کے لیے بوجھ بن جاتا ہے لہذاپنی صحت کا خیال رکھیں۔ مال جمع کرنا آسان ہے لیکن سنبھالنا مشکل ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: