رسول ﷺکی حکمت سے بے حیا عورت باحیا گئی

حضرت ابوامامہ رضی اللہ تعالی عنہ فرماتے ہیں کہ ایک عورت مردوں سے بے حیائی کی باتیں کیا کرتی تھی اور بہت بے باک اور بد کلام تھی.

ایک مرتبہ وہ حضورصلی اللہ علیہ وسلم کے پاس سے گزری حضور صلی اللہ علیہ وسلم ایک اونچی جگہ پر بیٹھے ہوئے ٹرید کھارہے تھے، اس پر اس عورت نے کہا نہیں دیکھوایسے بیٹھے ہوئے ہیں جیسے غلام بیٹھتا ہے،ایسےکھارہے ہیں جیسے غلام کھاتا ہے۔ بین کر حضور صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا کون سابندہ مجھ سے زیادہ بندگی اختیار کرنے والا ہوگا۔ پھر اس عورت نے کہا یہ خودکھارہے ہیں اور مجھے نہیں کھلارہے ہیں حضور صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا تو بھی کھالے اس نے کہا مجھے اپنے ہاتھ سے عطافرمائیں۔ حضور صلی اللہ علیہ وسلم نے اس کو دیا تواس نے کہا جو آپ کے منہ میں ہے اس میں سے دیں حضورصلی اللہ علیہ وسلم نے اس میں سے دیا جسے اس نے کھالیا (اس کھانے کی برکت سے اس پر شرم وحیا غالب آ گئی اور اس کے بعد اپنے انتقال تک کسی سے بے حیائی کی کوئی بات نہ کی۔


(حیاۃ الصحاب جلد۲ ص۷۰)

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

%d bloggers like this: