زندگی کے کچھ مرحلے

ہزاروں خیرخواہ ہوں یا ہزاروں دوست ہوں ، ان گنت لوگوں سے بھری محفل ہو یا پھر لاکھوں لوگوں کا قافلہ ہو.! زندگی کے کچھ مرحلے انسان کو تنہا ہی اللہ کے ساتھ طے کرنے پڑتے ہیں. اور جب ہم ان مراحل سے گزر رہے ہوتے ہیں۔

تو قدموں کی آہٹ اتنی خاموش ہوتی ہے کے ساتھ بیٹھے ہوئے شخص کو بھی اس کا علم نہیں ہوتا. ہم سب ہی اپنے اندر ایسی بہت ساری چیزوں سے لڑ رہے ہوتے ہیں جسکا ذکر ہم کسی اور سے تو دور کی بات ہے خود کے ساتھ بھی نہیں کر سکتے. لیکن اللہ سب جانتا ہے جو ہم کہتے ہیں اور جو نہیں کہہ پاتے. حدیث شریف میں ہے: انسان کے اسلام کی خویبوں میں سے ایک (خوبی) چھوڑ دینا ہے اس (اَمْر)کا جو اسے نفع نہ دے۔(سُنَنُ التِّرْمِذِیّ ج۴ ص۱۴۲ حدیث ۲۳۴۴)

رات کو دینی مشاغل سے فارغ ہوکر جلد سوجایئے کہ رات کا آرام دن کے آرام کے مقابلے میں زیادہ صحت بخش ہے۔ اپنے دیگر اوقات کو بہتر طور پر استعمال کیجئے مثلاً، فرائض وواجبات کی ادائیگی، دینی کتب کا مطالعہ ،نیکی کی دعوت ،علماء کی صحبت ،مدنی کاموں میں شرکت ،گھر والو ں کی اصلاح وتربیت ، کسب ِحلال کےلئے کوشش کریں وغیرہ

Leave a Reply

Your email address will not be published.

%d bloggers like this: