محبت میں رابعہ بصری کا حال

حضرت رابعہ بصری ایک ہاتھ میں پانی لے کر دوسرے میں آگ لے کر ایک بار جاری تھیں اور کہے رہی تھیں کہ آگ سے جنت کو جلاوں گی اور پانی سے جہنم کو بجھاوں گی.

تا کہ لوگ جنت اور جہنم کیلئے عبادت نہ کریں یہ رابعہ بصری کے غلبہ حال کا واقعہ ہے۔ حضرت مهر رالف اني رحم الله تعالی فرماتے ہیں: کہ اگر رابعہ باری بھیر سے واقف ہوتی تو وہ ایسا کام نہ کرتی اس لیے کہ الله تعالی خود جنت کی طرف بلا رہے ہیں والله يدعو إلى دار السلام اور جس کی طرف اللہ بلائیں اس کی طرف جانا عین منشائے خداوندی ہوتا ہے۔ اللہ والوں کی محبت والی کے غلبہ میں ایسی باتیں کر جانا محبت کی وجہ سے ہوتاہے۔ (سکون ولی ۲۱۶)

Leave a Reply

Your email address will not be published.

%d bloggers like this: