ہر قطرہ سے اللہ….اللہ

حضرت شیلی اللہ تعالی کی محبت میں فنا ہو چکے تھے کتابوں میں لکھا ہے کہ ایک مرتبہ ان کو مجنون سمجھ کر کسی نے پتھر مارا جس کی وجہ سے خون نکل آیا .

ایک آدمی دیکھ رہا تھا اس نے جب خون نکلتا دیکھا تو کہا کہ چلو میں پٹی باندھ دیتا ہوں لہذا اس نے بچوں کو ڈرایا دھمکایا اور ان کے قریب ہوا وہ دیکھ کر حیران ہوا کہ جو قطرہ بھی خون کا نکلتا ہے وہ زمین پر گرتے ہی اللہ کا لفظ بن جاتا ہے وہ حیران ہوا کہ اس بندے کے رگ وریشے میں اللہ تعالی کی کتنی محبت سمائی ہوگی کہ خون کا جو قطرہ بھی کرتا ہے وہ اللہ کا لفظ بن جا تا ہے۔اس کے بعد اس نے زخم پر پٹی باندھ دی۔ کثرت ذکر کا اثر بھی رگ وریشہ میں سما جا تا ہے اور انگ انگ ذاکر بن جا تا ہے ۔ (خطبات ذوالفقار: ۱۲۷/ ۷)

Leave a Reply

Your email address will not be published.

%d bloggers like this: