صحبت کے انمول موتی

امام زین العابدین نے اپنے بیٹے باقر کو نصیحت کرتے ہوئے فرمایا بیٹا چار آدمیوں کے پاس راستہ چلتے ہوئے ان کے ساتھ تھوڑی دیر کیلئے بھی نہ چلنا کہنے لگے کہ میں بڑا حیران ہوا کہ وہ اتنے خطرناک ہیں پوچھا کہ وہ کون سے آدمی ہیں؟ فرمایا:

ایک بخیل آدمی اس سے بھی دوستی نہ کرنا اس لیے کہ وہ مجھے ایسے وقت میں دھوکہ رے گا جب تجھے اس کی بہت ضرورت ہوگی دوسرا جھوٹا آ دمی کہ وہ دور کوقریب ظاہر کرے کا اور قریب کو دوراور تیسرا فاسق آ دمی کیونکہ وہ تجھے ایک لقمہ کے بدلے یا ایک لقمہ سے بھی کم میں بیچ دے گا’ کہتے ہیں کہ میں نے پوچھا ابو!ایک لقمہ میں بیچنا تو سمجھ میں آتا ہے ایک لقمہ سے بھی کم میں بیچنے کا کیا مطلب ہے؟ فرمایا کہ وہ تمہیں ایک لقمہ کی امید پر بیچ دے گا اور چوتھا قطع رحمی کرنے والا آ دمی کیونکہ میں نے قرآن پاک میں کئی جگہ اس پرلعنت دیکھی ہے یہ باپ کی صحبت کے انمول موتی تھے جو بیٹے کومل رہے تھے ایک وہ وقت تھا کہ باپ اپنے بیٹوں کو نصیحت کیا کرتے تھے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.

%d bloggers like this: