محبت نبوی ﷺ پر بشارت

ایک صحابی حضورﷺ کی خدمت میں آ کر عرض کرتے ہیں اے اللہ کے نبی ﷺ میں ایک بات سے بہت پریشان ہوں جس وقت آپ ﷺ کی محبت ہمارے دلوں میں لہریں مارتی ہے۔

ہم حاضر ہو کر آپ ﷺ کی زیارت سے اپنی آنکھوں کو ٹھنڈا کر لیتے ہیں ۔لیکن جنت میں آپ بہت اعلی درجوں پر ہوں گے اور ہم نیچے کے درجے میں ہونگے ۔ وہاں اگر آپ کی زیارت نہ ہوئی تو ہمیں جنت کا کیا لطف آۓ گا؟ چنانچہ اس وقت جبرئیل علیہ السلام آۓ اور آ کر اطلاع دی آپ نے اس شخص کو بلایا اور خوشخبری سنائی ۔ الـمـر مـع مـن احسب ( آ دی اس کے ساتھ ہوگا جس سے اس کو محبت ہوگی ) صحابہ کرام تر ماتے ہیں کہ پوری زندگی میں ایمان کے بعد جتنی خوشی اس حدیث سے ہوئی کسی اور حدیث سے نہیں ہوئی کیونکہ یقین ہو گیا کہ آخرت میں ہمیں حضور کا ساتھ نصیب ہو جاۓ گا ۔ صحابہ رضی اللہ تعالی عنہم اجمعین حضورﷺ سے اس طرح محبت کرتے ہیں ۔(خطبات ذوالفقارص ۲/۱۰۴).

Leave a Reply

Your email address will not be published.

%d bloggers like this: